اہم خبریں

ن لیگ کے 17ارکان کی مبینہ بغاوت،صدر عارف علوی کے انتخاب کے بعد دو چیزیں طے ہو گئیں‘ بابر اعوان نے استعفیٰ کیوں دیا؟ سرکاری عہدیداروں وزراء پر الزامات کیوں لگارہے ہیں؟جاوید چودھری کاتجزیہ

خواتین وحضرات ۔۔ ڈاکٹر عارف علوی ملک کے تیرہویں صدر منتخب ہو چکے ہیں‘ ڈاکٹر صاحب نے کل 353الیکٹورل ووٹ حاصل کئے‘ مولانا فضل الرحمن کو186جبکہ چودھری اعتزاز احسن کو124 ووٹ ملے‘ پنجاب اسمبلی میں ن لیگ کے 17 ووٹ ضائع ہو ئے‘ یہ 17 لوگ باغی سمجھے جا رہے ہیں کیونکہ ۔۔انہوں نے سپیکر کے الیکشن میں بھی چودھری پرویز الٰہی کو ووٹ دیا تھا‘ ن لیگ ڈاکٹر عارف علوی کی کامیابی کا کریڈٹ آصف علی زرداری کو دے رہی ہے۔صدر کے انتخاب کے بعد دو چیزیں طے ہو گئیں‘ پہلی حکومت کے راستے میں اب کوئی پارلیمانی رکاوٹ نہیں رہی‘ صدر پی ٹی آئی کا‘ وزیراعظم‘ سپیکر‘ ڈپٹی سپیکر‘ چیئرمین سینٹ‘ دو صوبوں کی حکومت اور تیسرے صوبے میں اتحادی حکومت اور منقسم اپوزیشن غرض حکومت کے راستے میں اب کوئی رکاوٹ موجود نہیں‘ حکومت اگر اب بھی ڈیلیور نہیں کرتی تو پھر ۔۔اس کے پاس اپنی ناکامی کا کوئی جواز‘ کوئی دلیل نہیں ہو گی‘ دو‘ صدر کے انتخاب کے ساتھ ہی اپوزیشن کا اتحاد بھی ٹوٹ گیا‘ اب کوئی بڑا سانحہ ہی ۔۔ ان لوگوں کو (دوبارہ) اکٹھا بٹھا سکے گا ورنہ یہ لوگ مقناطیس کے ایک جیسے۔۔ سروں کی طرح ایک دوسرے سے دور دور رہیں گے لیکن بہرحال عارف علوی ایک اچھا فیصلہ ہیں‘ یہ پارٹی اور ملک دونوں کیلئے اثاثہ ثابت ہوں گے‘ کیا صدر نمائشی عہدے پر بیٹھ کر کوئی غیر نمائشی کام کر سکیں گے‘یہ ہمارا آج کا ایشو ہوگا جبکہ آج راجن پور کے ڈپٹی کمشنر نے بھی پی ٹی آئی اے کے مقامی ایم این اے سردار نصراللہ دریشک اور صوبائی وزیر حسنین بہادر دریشک پر محکمہ مال اور بارڈر ملٹری پولیس میں تبادلوں کیلئے دباؤ ڈالنے کا الزام لگا دیا‘ یہ دو دن میں ۔۔اس نوعیت کا دوسرا الزام ہے‘ کل چکوال کے ڈپٹی کمشنر نے ایم این اے ذوالفقار خان پر الزام لگایا تھا اور آج یہ سکینڈل سامنے آ گیا‘ یہ کیا ہو رہا ہے اور بابر اعوان نے نیب کا ریفرنس بننے کے بعد اپنے (عہدے) سے استعفیٰ دے دیا‘ یہ بہت اچھی روایت ہے اور فواد چودھری قادیانی مشیر عاطف میاں کی حمایت میں سامنے آ گئے،یہ تمام ایشوز ہمارے آج کے پروگرام کا حصہ ہوں گے‘ ہمارے ساتھ رہیے گا۔

مزید دیکھائیں

احتساب ڈیسک

روزنامہ احتساب لاہور، اسلام آباد اور کراچی سے بیک وقت شائع ہونے والا قومی اخبار ہے۔ روزنامہ احتساب پیشہ ورانہ صلاحیتوں کے حامل صحافیوں کی ٹیم پر مشتمل ایک رجسٹرڈ ادارہ ہے۔ احتساب ڈاٹ کوم، احتساب میگزین اور احتساب ٹی وی باقاعدہ حکومت پاکستان سے منظور شدہ ہیں
Close