اہم خبریں

پاکستان تحریک لبیک کا قافلہ اسلام آباد میں پڑاؤ ڈال دے گا، وفاقی انتظامیہ، پولیس و دیگر ادارے الرٹ ،ہنگامی پلان تیارکرلیاگیا

اسلام آباد(آن لائن) ہالینڈ میں حضرت محمد ﷺ کے خاکوں کے مقابلے کیخلاف پاکستان تحریک لبیک کا قافلہ رات گئے تک اسلام آباد میں پڑاؤ ڈال دے گا۔ وفاقی انتظامیہ، پولیس و دیگر ادارے الرٹ کر دیئے گئے۔ سرینہ چوک ، نادرا چوک، ڈی چوک، کشمیر ہائی وے سمیت متعدد دیگر راہداریوں کو بھاری کنٹینرز سے سیل کر دیا گیا۔ ٹریفک پولیس نے شہریوں کے لئے ٹریفک بہاؤ سلسلہ میں ڈائیورژن پلان ترتیب دے دیا ہے۔معلومات کے مطابق پاکستان تحریک لبیک کے فاؤنڈر علامہ خادم حسین رضوی کی قیادت میں لاہور ، گوجرانوالہ اور جہلم سے قافلے اسلام آباد کی جانب ہالینڈ حکومت کے اقدام کے خلاف احتجاج کے لئے روانہ ہو چکے ہیں۔ اس سلسلے میں گزشتہ شب اسلام آباد انتظامیہ نے پاکستان تحریک لبیک انتظامیہ سے مذاکرات بھی کئے لیکن ذرائع کے مطابق وہ ناکام ٹھہرے ہیں۔ تحریک لبیک قیادت کا کہنا ہے کہ حکومت پاکستان کی جانب سے جب تک ملک سے ہالینڈ حکومت کے سفارتخانے بند نہیں کئے جاتے اس وقت تک وہ سابق دھرنہ والی جگہ پر اپنا پڑاؤ ڈالیں گے اور اس بار کسی بھی بات سے اعتماد نہ کرتے ہوئے سفارتخانے بند ہونے کی صورت میں واپس جائیں گے۔ مگر حکومتی ذرائع کا کہنا ہے کہ تحریک لبیک قیادت کے ساتھ ان کی بات چیت مکمل ہو چکی ہے وہ علامتی طور پر اپنا احتجاج ریکارڈ کرانے کے بعد واپس اپنی منزلوں کو روانہ ہوں گے۔ قانون نافذ کرنیو الے اداروں نے وزارت داخلہ کو ایک رپورٹ میں کہا ہے کہ پاکستان تحریک لبیک اسلام آباد میں آ کر اپنے پڑاؤ کو دھرنے کی شکل دے سکتی ہے اور وہ دھرنا ہفتہ سے 10دن تک چل سکتا ہے۔ وفاقی پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ کشمیر ، کے پی کے اور پنجاب سے متعدد پولیس دستوں کی نفریاں اسلام آباد منگوا لی گئی ہیں اور اس موقع پر رینجرز ، ایف سی و دیگر اداروں سے بھی خدمات لی جائیں گی اور پولیس ہیڈ کوارٹر میں گزشتہ شب ہونے والے اہم اجلاس میں پولیس کی رہائش اور ان کے قیام و طعام کے بندو بست کے لئے بھی فنڈ لے لیا گیا ہے۔راولپنڈی ٹریفک پولیس نے تحریک لبیک یا رسولِ ﷺ کے زیر اہتمام نبی آخرالزمان ﷺ کے ناموس کے لئے لاہور سے راولپندی لانگ مارچ کی آج (بروزجمعہ) راولپنڈی آمد کے موقع پر ٹریفک پلان جاری کر دیا ہے ٹریفک پولیس کی سپیشل ڈیوٹیاں لگا دی گئی ہیں فیض آباد کے مقام پر احتجاج کی صورت میں صدر سے اسلام آباد جانے والی ٹریفک کو چاندنی چوک سے کمرشل مارکیٹ کے راستے سید پور روڈ کی طر ف ڈائیورٹ کیا جائے گااسی طرح مری روڈچاندنی چوک سے اسلام آباد جانے والی ٹریفک کو ڈبل روڈ چوک سے سٹیڈیم روڈ پرڈائیورٹ کیا جائے گاجبکہ9th ایونیو سے راولپنڈی آنے والی ٹریفک کو ڈبل روڈ چوک ، آئی ایس آئی یو ٹرن سے راولپنڈی ڈائیورٹ کیا جائے گا اسی طرح ٹی چوک روات میں احتجاج کی صورت میں راولپنڈی شہر سے لاہور کی طر ف جانے والی ٹریفک کو کہوٹہ وسہالہ موڑ سے ماڈل ٹاؤ ن کاک پل کی طر ف اورراولپنڈی شہر سے لاہور جانے والی ٹریفک کو ہائیکورٹ چوک سے گلزیر ،ڈھوک چوھدریاں سے سکیم III سے براستہ کرال چوک جبکہ راولپنڈی شہر سے لاہور جانے والی ٹریفک کو کچہری چوک سے ائرپورٹ روڈ کرال چوک کی طر ف ڈائیورٹ کیا جائے گا، کچہری چوک میں احتجاج کی صورت میں لاہور سے آنے والی ٹریفک کو سی او ڈی ٹرن جہلم روڈ سے نذر چوک ، چونگی نمبر22 کی طرف اور ائرپورٹ کی طرف سے آنے والی ٹریفک کو چوہان چوک سے راول روڈجبکہ صدر سے آنے والی ٹریفک کو ٹی ایم چوک سے مری روڈ کی طرف ڈائیورٹ کیا جائے گااسی طرح مری روڈ سے آنے والی ٹریفک مریڑ چوک سے صدر اور مریڑ چوک احتجاج کی صورت میں لاہور سے آنے والی ٹریفک کوپنجاب ہاؤس یو ٹرن سے جھنڈاچیچی کی طرف ،صدر کی طرف سے آنے والی ٹریفک کو کامران مارکیٹ سے گوالمنڈی ڈائیورٹ کیاجائے گاجبکہ اسلام آباد سے براستہ مری روڈ آنے والی ٹریفک ریالٹو چوک،موتی محل سے ٹیپو روڈ کی طرف ٹی ایم چوک کی طرف سے آنے والی ٹریفک کوکے ایف سی چوک سے صدرکی جانب ڈائیورٹ کیا جائے گا، لیاقت باغ احتجاج کی صورت میں صدر اور کچہری چوک کی طرف سے آنے والی ٹریفک کو مریڑ چوک سے صدر، کچہری اورٹی ایم چوک کی طرف ڈائیورٹ کیا جائے گا اسلام آباد سے براستہ مری روڈ راولپنڈی آنے والی ٹریفک کو راول روڈکی جانب ڈائیورٹ کیا جائے گافوارہ چوک سے لیاقت باغ کی طرف آنے والی ٹریفک کو ڈی اے وی کالج چوک سے گوالمنڈی کی جانب جبکہ ریالٹو انڈر پاس سے لیاقت باغ جانے والی ٹریفک کوآغاز انڈر پاس سے مریڑکی جانب ڈائیورٹ کیا جائے گا ۔

مزید دیکھائیں

احتساب ڈیسک

روزنامہ احتساب لاہور، اسلام آباد اور کراچی سے بیک وقت شائع ہونے والا قومی اخبار ہے۔ روزنامہ احتساب پیشہ ورانہ صلاحیتوں کے حامل صحافیوں کی ٹیم پر مشتمل ایک رجسٹرڈ ادارہ ہے۔ احتساب ڈاٹ کوم، احتساب میگزین اور احتساب ٹی وی باقاعدہ حکومت پاکستان سے منظور شدہ ہیں
Close